تازہ ترین خبر
ہوم / علاقائی خبریں / ڈیرہ اسماعیل خان .ڈیرہ میں قائم شوگر ملیں ڈیرہ والوں کا استحصال کر رہی ہیں،

ڈیرہ اسماعیل خان .ڈیرہ میں قائم شوگر ملیں ڈیرہ والوں کا استحصال کر رہی ہیں،

ڈیرہ اسماعیل خان .ڈیرہ میں قائم شوگر ملیں ڈیرہ والوں کا استحصال کر رہی ہیں، اس مٹی سے اربوں روبے سالانہ کمانے والے سیس فنڈز اور سوشل ویلفیئر فنڈ کی مد میں ایک دھیلا بھی اس شہر کو دینے کو تیار نہیں، ملازمتوں کی مد میں مقامی لوگوں کو محض مزدوری تک محدود کر رکھا ہے جبکہ گنے کے کاشتکاروں کے ساتھ روا رکھا جانے والا ان ملوں کے مالکان اور انتظامیہ کارویہ بھی ڈیرہ دشمنی کی واضح مثال ہے، المان صیام ملز کا قیام ثابت کرے گا کہ اس کے ذریعے ڈیرہ کے عوام کو فوقیت دی گئی ہے، سیس فنڈ سے سڑکوں کی تعمیر جبکہ سوشل ویلفیئر فنڈ سے عالمی سطح کے ہسپتال اور تعلیمی ادارے بنائے جائیں گے، ملازمتیں تمام مقامی افراد کو دی جائیں گی، شیخ یعقوب نے اپنی شوگر ملز کو انقلابی منصوبہ قرار دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق،چہکان سے رکن ضلع اسمبلی اور معروف صنعتکار شیخ یعقوب نے اپنے ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ ڈیرہ اسماعیل خان میں موجود چاروں شوگر ملیں ہر لحاظ سے ڈیرہ والوں کا استحصال کرتی چلی آ رہی ہیں جس پر نہ ہی سیاسی قیادت وعوامی سماجی حلقے آواز اٹھا رہے ہیں اور نہ ہی انتظامی مشینری اس حوالے سے کوئی اقدامات اٹھاتی دکھائی دے رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ شوگر ملیں سالانہ بنیادوں پر اربوں روپے کا منافع اس شہر سے حاصل کرتی ہیں لیکن آج تک انہوں نے اس منافع کے مقابل سیس فنڈز اور سوشل ویلفیئر فنڈ کا ایک دھیلا بھی اس شہر کی بہتری اور فلاح و بہبود کے لئے خرچ نہیں کیاجبکہ اگر حساب کیا جائے تو ان دونوں طرح کے فنڈز سے اس شہر اور اسکے باسیوں کی قسمت تبدیل کی جا سکتی تھی۔ شیخ یعقوب کا مزید کہنا تھا کہ ایک طرف جہاں یہ شوگر ملیں ملازمتوں کی مد میں مقامی آبادی کو نظر انداز کر رہی ہیں وہیں گنے کے مقامی کاشتکاروں کابھی مسلسل استحصال دیکھنے میں آرہا ہے۔شیخ یعقوب نے دعویٰ کیا کہ ان کی جانب سے ڈیرہ اسماعیل خان میں قائم کی جانے والی ”المان صیام” شوگر ملز، ڈیرہ اسماعیل خان میں ناصرف صنعتی انقلاب لے کر آئے گی بلکہ اس صنعتی ادارے سے حاصل شدہ سیس فنڈ اور سوشل ویلفیئر فنڈسے ڈیرہ کے عوام کی قسمت بدل کر رکھ دی جائے گی۔ انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ شوگر ملز کے چالو ہونے کے ان کی جانب سے ڈسٹرلی پلانٹ، سٹیل ملز اور سیمنٹ کا کارخانہ بھی لگایا جائے گا اور ان تمام صنعتی اداروں میں تمام کی تمام ملازمتیں مقامی افراد کو فراہم کی جائیں گی ۔ تاہم ایسی مہارتیں کہ جن کے حامل افراد ڈیرہ اسماعیل خان میں موجود نہ ہوں، ان کے حوالے مجبوراََ باہر سے بھرتی کی جائے گی۔ ان تمام اداروں سے حاصل شدہ سیس فنڈز سے ڈیرہ اسماعیل خان میں پختہ سڑکوں کا جال بچھایا جائے گا جبکہ سوشل ویلفیئر فنڈز کے تحت عالمی سطح کا ہسپتال اور یونیورسٹی جیسے منصوبے سامنے لائے جائیں گے۔شیخ یعقوب نے اعلان کیا کہ المان صیام میں لگائی جانے والی ٹربائین سے35سے65میگاواٹ بجلی پیدا کی جائے گی اور کوشش کی جائے گی کہ پیدا ہونے والے یہ بجلی نیشنل گرڈ میں شامل کرنے کے بجائے براہ راست ڈیرہ کے عوام کو فراہم کی جاسکے تاہم اس کے لئے مطلوبہ طریقہ کار وضح کرنے کے لئے مشاو رت جاری ہے۔

کے بارے میں admin

Check Also

شاہد آفریدی دعوتِ تبلیغ کے سلسلے میں بلوچستان کے ضلع لسبیلہ پہنچ گئے

خضدار: شاہد آفریدی دعوتِ تبلیغ کے سلسلے میں بلوچستان کے ضلع لسبیلہ پہنچ گئے کرکٹ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Translate »